قیامت کی بڑی علامات کی صحیح ترتیب


احادیث کا تجزیاتی مطالعہ

الواقعۃ شمارہ: 82 – 85، ربیع الاول تا جمادی الثانی 1440ھ

اشاعت خاص : فتنہ دجالیت

از قلم : محمد زبیر شیخ

الحمد للّٰہ رب العالمین، والصلاۃ والسلام علی رحمۃ للعالمین. یہ کائنات جو ہمیں آج رنگ برنگی اور بھری بھری نظر آتی ہے، کہیں صحرا، کہیں پہاڑ، کہیں ریگستان، کہیں گلستان، ایک وقت آئے گا کہ اس کی یہ ساری دل کشی اور خوب صورتی ختم ہو جائے گی۔ اس وقت کو قیامت کہا جاتا ہے۔ قیامت کے بارے میں رب کائنات نے قرآن مجید میں بتایا ہے کہ کو پڑھنا جاری رکھیں

Advertisements

غفلت


الواقعۃ شمارہ: 72 – 73 جمادی الاول جمادی الثانی 1439ھ

از قلم : محمد تنزیل الصدیقی الحسینی

غفلت، بادِ سموم کے جھونکے کی طرح ہوتی ہے۔ انسان جب مسموم فضا میں ہوتا ہے تو اپنی ہر سانس کے ساتھ اپنے جسم میں زہر اتارتا جاتا ہے حتیٰ کہ جسم زندگی کی حرارت سے محروم ہو جاتا ہے اور دل کی دھڑکن ہمیشہ کے لیے خاموش ہو جاتی ہے۔ کو پڑھنا جاری رکھیں

قرآن ایک ابدی فیضان


الواقعۃ شمارہ : 61-62، جمادی الثانی و رجب المرجب 1438ھ

از قلم : پروفیسر عبد العظیم جانباز

ارشادِ ربانی ہے:-
اِنَّ ہَذَا الْقُرْآنَ یِہْدِیْ لِلَّتِیْ ہِیَ أَقْوَمُ
"بلاشبہ یہ قرآن سب سے سیدھے راستے کی طرف نشاندہی کرتا ہے۔” (سورة بنی اسرائیل:۹)
ایک مقام پر پوری انسانیت کو خطاب کرتے ہوئے فرمایا گیا:- کو پڑھنا جاری رکھیں

فسق و فجور کا آئینہ


الواقعۃ شمارہ 46 ربیع الاول 1437ھ

از قلم : ابو الحسن

اللہ تعالیٰ نے اپنے خلیفہ فی الارض کو تعقل، تفکر اور تفقہ کی صلاحیتیں عطا فرمائیں۔ ان نعمتوں کی قدر دانی کرنے والوں کو قوم یومنون ، قوم الصالحین ، قوم یعدلون قرار دیا۔ قوم نوح کے لوگوں کو جو اپنے پیغمبر کی جگہ سرکش ظالم حکمرانوں کی پیروی کرتے تھے قوماً عمین قرار دیا۔ فرمایا : وَأَغۡرَقۡنَا ٱلَّذِينَ كَذَّبُواْ بِ‍َٔايَٰتِنَآۚ إِنَّهُمۡ كَانُواْ قَوۡمًا عَمِينَ ٦٤ ( الاعراف : 64 ) اور کافروں کے لیے عموماً فرمایا :

وَنَطۡبَعُ عَلَىٰ قُلُوبِهِمۡ فَهُمۡ لَا يَسۡمَعُونَ  ( الاعراف : 100 )

کو پڑھنا جاری رکھیں