قرآن میں مذکور دعائیں


الواقعۃ شمارہ 53 – 54 ، شوال المکرم و ذیقعد 1437ھ

از قلم : محمد عالمگیر ، آسٹریلیا

بسم اللہ الرحمٰن الرحیم

حضرت آدم علیہ السلام کی دعاء

رَبَّنَا ظَلَمْنَا أَنفُسَنَا وَإِن لَّمْ تَغْفِرْ لَنَا وَتَرْحَمْنَا لَنَكُونَنَّ مِنَ الْخَاسِرِينَ ( سورة الاعراف، ۷:۲۳ )

"اے ہمارے رب! ہم نے اپنا بڑا نقصان کیا،اور اگر تو ہماری مغفرت نہ کرے گا ،اور ہم پر رحم نہ کرے گا، تو واقعی ہم نقصان پانے والوں میں سے ہو جائیں گے۔”

حضرت نوحؑ علیہ السلام کی دعائیں

(۱)

رَبِّ لَا تَذَرْ عَلَى الْأَرْضِ مِنَ الْكَافِرِينَ دَيَّارًا ( سورة نوح، ۷۱:۲۶ )

"اے میرے پالنے والے! تو روئے زمین پر کسی کافر کو رہنے سہنے والانہ چھوڑ ۔”

إِنَّكَ إِن تَذَرْهُمْ يُضِلُّوا عِبَادَكَ وَلَا يَلِدُوا إِلَّا فَاجِرًا كَفَّارًا (سورة نوح ، ۷۱:۲۷ )

"اگر تو انہیں چھوڑ دے گا تو (یقیناً) یہ تیرے (اور) بندوں کو (بھی) گمراه کر دیں گے۔”

رَبِّ اغْفِرْ لِي وَلِوَالِدَيَّ وَلِمَن دَخَلَ بَيْتِيَ مُؤْمِنًا وَلِلْمُؤْمِنِينَ وَالْمُؤْمِنَاتِ وَلَا تَزِدِ الظَّالِمِينَ إِلَّا تَبَارًا ( سورة نوح ، ۷۱:۲۸ )

"اور یہ فاجروں اور ڈھیٹ کافروں ہی کو جنم دیں گے اے میرے پروردگار! تو مجھے اور میرے ماں باپ اور جو بھی ایمان کی حالت میں میرے گھر میں آئےاور تمام مومن مردوں اور عورتوں کو بخش دےاور کافروں کو سوائے بربادی کے اور کسی بات میں نہ بڑھا –۔”

(۲)

رَبِّ إِنِّي أَعُوذُ بِكَ أَنْ أَسْأَلَكَ مَا لَيْسَ لِي بِهِ عِلْمٌ وَإِلَّا تَغْفِرْ لِي وَتَرْحَمْنِي أَكُن مِّنَ الْخَاسِرِينَ( سورة ھود، ۱۱:۴۷ )

"میرے پالنہار میں تیری ہی پناه چاہتا ہوں اس بات سے کہ تجھ سے وه مانگوں جس کا مجھے علم ہی نہ ہواگر تو مجھے نہ بخشے گا اور تو مجھ پر رحم نہ فرمائے گا، تو میں خساره پانے والوں میں ہو جاؤں گا۔”

حضرت ابراہیم علیہ السلام کی دعائیں

(۱)

رَبَّنَا عَلَيْكَ تَوَكَّلْنَا وَإِلَيْكَ أَنَبْنَا وَإِلَيْكَ الْمَصِيرُ ( سورة الممتحنة، ۶۰:۴ )

"اے ہمارے پروردگار تجھی پر ہم نے بھروسہ کیا ہے اور تیری ہی طرف رجوع کرتے ہیںاور تیری ہی طرف لوٹنا ہے۔”

رَبَّنَا لَا تَجْعَلْنَا فِتْنَةً لِّلَّذِينَ كَفَرُوا وَاغْفِرْ لَنَا رَبَّنَاإِنَّكَ أَنتَ الْعَزِيزُ الْحَكِيمُ ( سورة الممتحنة، ۶۰:۵ )

"اے ہمارے رب! تو ہمیں کافروں کی آزمائش میں نہ ڈال اور اے ہمارے پالنے والے ہماری خطاؤں کو بخش دے بیشک تو ہی غالب، حکمت والاہے ۔” –

(۲)

رَبِّ هَبْ لِي حُكْمًا وَأَلْحِقْنِي بِالصَّالِحِينَ ( سورة الشعراء، ۲۶:۸۳ )

"اے میرے رب! مجھے قوت فیصلہ عطا فرما اور مجھے نیک لوگوں میں ملا دے ۔”

وَاجْعَل لِّي لِسَانَ صِدْقٍ فِي الْآخِرِينَ ( سورة الشعراء، ۲۶:۸۴ )

"اور میرا ذکر خیر پچھلے لوگوں میں بھی باقی رکھ ۔” 

وَاجْعَلْنِي مِن وَرَثَةِ جَنَّةِ النَّعِيمِ –(سورة الشعراء، ۲۶:۸۵ )

"مجھے نعمتوں والی جنت کے وارثوں میں سے بنا دے۔”

(۳)

وَلَا تُخْزِنِي يَوْمَ يُبْعَثُونَ ( سورة الشعراء، ۲۶:۸۷ )

"اور مجھے ذلیل نہ کر جس دن لوگ اٹھائے جائیں گے۔”

يَوْمَ لَا يَنفَعُ مَالٌ وَلَا بَنُونَ  (سورة الشعراء، ۲۶:۸۸ )

"جس دن مال اور اولاد نفع نہیں دے گی ۔”

إِلَّا مَنْ أَتَى اللَّـهَ بِقَلْبٍ سَلِيمٍ  ( سورة الشعراء، ۲۶:۸۹ )

"لیکن فائده والا وہی ہوگا جو اللہ تعالیٰ کے سامنے بے عیب دل لے کر جائے ۔”

(۴)

رَبَّنَا تَقَبَّلْ مِنَّا إِنَّكَ أَنتَ السَّمِيعُ الْعَلِيمُ ( سورة البقرة، ۲:۱۲۷ )

"ہمارے پروردگار! تو ہم سے قبول فرما، تو ہی سننے والااور جاننے والا ہے۔”

رَبَّنَا وَاجْعَلْنَا مُسْلِمَيْنِ لَكَ وَمِن ذُرِّيَّتِنَا أُمَّةً مُّسْلِمَةً لَّكَ وَأَرِنَا مَنَاسِكَنَا وَتُبْ عَلَيْنَا إِنَّكَ أَنتَ التَّوَّابُ الرَّحِيمُ ( سورة البقرة، ۲:۱۲۸ )

"اے ہمارے رب! ہمیں اپنا فرماں بردار بنا لے ، اور ہماری اولاد میں سے بھی ایک جماعت کو اپنی اطاعت گزار رکھ، اور ہمیں اپنی عبادتیں سکھا اور ہماری توبہ قبول فرما، تو توبہ قبول فرمانے والااور رحم و کرم کرنے والاہے۔” 

(۵)

رَبَّنَا إِنَّكَ تَعْلَمُ مَا نُخْفِي وَمَا نُعْلِنُ وَمَا يَخْفَىٰ عَلَى اللَّـهِ مِن شَيْءٍ فِي الْأَرْضِ وَلَا فِي السَّمَاءِ ( سورة ابراهيم، ۱۴:۳۸ )

"اے ہمارے پروردگار! تو خوب جانتا ہے جو ہم چھپائیں اور جو ظاہر کریں،زمین و آسمان کی کوئی چیز اللہ پر پوشیده نہیں ۔”

(۶)

رَبِّ اجْعَلْنِي مُقِيمَ الصَّلَاةِ وَمِن ذُرِّيَّتِي رَبَّنَا وَتَقَبَّلْ دُعَاءِ ( سورة ابراهيم، ۱۴:۴۰ )

"اے میرے پالنے والے! مجھے نماز کا پابند رکھ اور میری اولاد سے بھی،اے ہمارے رب میری دعا قبول فرما۔”

رَبَّنَا اغْفِرْ لِي وَلِوَالِدَيَّ وَلِلْمُؤْمِنِينَ يَوْمَ يَقُومُ الْحِسَابُ ( سورة ابراهيم، ۱۴:۴۱ )

"اے ہمارے پروردگار! مجھے بخش دے اور میرے ماں باپ کو بھی بخش اور دیگر مومنوں کو بھی بخش جس دن حساب ہونے لگے ۔”

حضرت أیوب علیہ السلام کی دعائیں

(۱)

أَنِّي مَسَّنِيَ الضُّرُّ وَأَنتَ أَرْحَمُ الرَّاحِمِينَ ( سورة الانبياء، ۲۱:۸۳ )

” مجھے یہ بیماری لگ گئی ہے اور تو رحم کرنے والوں سے زیاده رحم کرنے والا ہے۔”

(۲)

أَنِّي مَسَّنِيَ الشَّيْطَانُ بِنُصْبٍ وَعَذَابٍ –( سورة ص، ۳۸:۴۱ )

"مجھے شیطان نے بڑی اذیّت اور تکلیف پہنچائی ہے ۔”

حضرت یوسف علیہ السلام کی دعاء

فَاطِرَ السَّمَاوَاتِ وَالْأَرْضِ أَنتَ وَلِيِّي فِي الدُّنْيَا وَالْآخِرَةِ تَوَفَّنِي مُسْلِمًا وَأَلْحِقْنِي بِالصَّالِحِينَ ( سورة یوسف، ۱۲:۱۰۱ )

” اے آسمانوں اور زمین کے پیدا فرمانے والے! تو دنیا میں (بھی) میرا کارساز ہے اور آخرت میں (بھی) مجھے حالتِ اسلام پر موت دینا اور مجھے صالح لوگوں کے ساتھ ملا دے ۔”

حضرت شعیب علیہ السلام کی دعاء

رَبَّنَا افْتَحْ بَيْنَنَا وَبَيْنَ قَوْمِنَا بِالْحَقِّ وَأَنتَ خَيْرُ الْفَاتِحِينَ ( سورة الاعراف، ۷:۸۹ )

"اے ہمارے پروردگار! ہمارے اور ہماری قوم کے درمیان حق کے موافق فیصلہ کر دے، اور تو سب سے اچھا فیصلہ کرنے والا ہے۔”

طالوت کے حامیوں کی دعاء 

رَبَّنَا أَفْرِغْ عَلَيْنَا صَبْرًا وَثَبِّتْ أَقْدَامَنَا وَانصُرْنَا عَلَى الْقَوْمِ الْكَافِرِينَ ( سورة البقرة، ۲:۲۵۰ )

"اے پروردگار ہمیں صبر دے، ثابت قدمی دے، اور قوم کفار پر ہماری مدد فرما۔”

حضرت موسٰی علیہ السلام کی دعائیں

(۱)

رَبِّ إِنِّي ظَلَمْتُ نَفْسِي فَاغْفِرْ لِي ( سورة القصص، ۲۸:۱۶ )

"اے پروردگار! میں نے خود اپنے اوپر ظلم کیا، تو مجھے معاف فرما دے۔”

(۲)

رَبِّ بِمَا أَنْعَمْتَ عَلَيَّ فَلَنْ أَكُونَ ظَهِيرًا لِّلْمُجْرِمِينَ( سورة القصص، ۲۸:۱۷ )

"اے میرے رب! جیسے تو نے مجھ پر یہ کرم فرمایا میں بھی اب ہرگز کسی گنہگار کا مددگار نہ بنوں گا۔”

(۳)

رَبِّ نَجِّنِي مِنَ الْقَوْمِ الظَّالِمِينَ ( سورة القصص، ۲۸:۲۱ )

” اے پروردگار! مجھے ظالموں کے گروه سے بچا لے۔”

(۴)

رَبِّ إِنِّي لِمَا أَنزَلْتَ إِلَيَّ مِنْ خَيْرٍ فَقِيرٌ ( سورة القصص، ۲۸:۲۴ )

"تو جو کچھ بھلائی میری طرف اتارے میں اس کا محتاج ہوں۔”

حضرت موسٰی علیہ السلام کی امت کی دعائیں 

(۱)

عَلَى اللَّـهِ تَوَكَّلْنَا رَبَّنَا لَا تَجْعَلْنَا فِتْنَةً لِّلْقَوْمِ الظَّالِمِينَ ( سورة یونس، ۱۰:۸۵ )

"ہم نے اللہ ہی پر توکل کیا ، اے ہمارے پروردگار! ہم کو ان ظالموں کے لیے فتنہ نہ بنا۔”

وَنَجِّنَا بِرَحْمَتِكَ مِنَ الْقَوْمِ الْكَافِرِينَ ( سورة یونس، ۱۰:۸۶ )

” اور ہم کو اپنی رحمت سے ان کافر لوگوں سے نجات دے۔”

(۲)

رَبَّنَا أَفْرِغْ عَلَيْنَا صَبْرًا وَتَوَفَّنَا مُسْلِمِينَ  ( سورة الاعراف، ۷:۱۲۶ )

"اے ہمارے رب! ہمارے اوپر صبر کا فیضان فرما، اور ہماری جان حالت اسلام پر نکال۔”

حضرت سلیمان علیہ السلام کی دعاء

رَبِّ أَوْزِعْنِي أَنْ أَشْكُرَ نِعْمَتَكَ الَّتِي أَنْعَمْتَ عَلَيَّ وَعَلَىٰ وَالِدَيَّ وَأَنْ أَعْمَلَ صَالِحًا تَرْضَاهُ وَأَدْخِلْنِي بِرَحْمَتِكَ فِي عِبَادِكَ الصَّالِحِينَ 

( سورة النمل، ۲۷:۱۹ )

"اے پروردگار! تو مجھے توفیق دے کہ میں تیری ان نعمتوں کا شکر بجا لاؤں ، جو تو نے مجھ پر انعام کی ہیں اور میرے ماں باپ پر، اور میں ایسے نیک اعمال کرتا رہوں جن سے تو خوش رہے، مجھے اپنی رحمت سے نیک بندوں میں شامل کر لے ۔”

باغ والوں کی دعاء

سُبْحَانَ رَبِّنَا إِنَّا كُنَّا ظَالِمِينَ ( سورة القلم، ۶۸:۲۹ )

"ہمارا رب پاک ہے بیشک ہم ہی ظالم تھے۔”

حضرت عیسٰی علیہ السلام کے حواریوں کی دعاء

رَبَّنَا آمَنَّا بِمَا أَنزَلْتَ وَاتَّبَعْنَا الرَّسُولَ فَاكْتُبْنَا مَعَ الشَّاهِدِينَ 

( سورة آل عمران، ۳:۵۳ ) 

"اے ہمارے پالنے والے معبود! ہم تیری اتاری ہوئی وحی پر ایمان لائے، اور ہم نے تیرے رسول کی اتباع کی، پس تو ہمیں گواہوں میں لکھ لے۔”

فرشتوں کی دعاء

رَبَّنَا وَسِعْتَ كُلَّ شَيْءٍ رَّحْمَةً وَعِلْمًا فَاغْفِرْ لِلَّذِينَ تَابُوا وَاتَّبَعُوا سَبِيلَكَ وَقِهِمْ عَذَابَ الْجَحِيمِ ( سورة غافر، ۴۰:۷ )

” اے ہمارے پروردگار! تو نے ہر چیز کو اپنی بخشش اور علم سے گھیر رکھا ہے، پس تو انہیں بخش دے جو توبہ کریں اور تیری راه کی پیروی کریں، اور تو انہیں دوزخ کے عذاب سے بھی بچا لے۔”

رَبَّنَا وَأَدْخِلْهُمْ جَنَّاتِ عَدْنٍ الَّتِي وَعَدتَّهُمْ وَمَن صَلَحَ مِنْ آبَائِهِمْ وَأَزْوَاجِهِمْ وَذُرِّيَّاتِهِمْ إِنَّكَ أَنتَ الْعَزِيزُ الْحَكِيمُ ( سورة غافر، ۴۰:۸ )

"اے ہمارے رب! تو انہیں ہمیشگی والی جنتوں میں لے جا جن کا تو نے ان سے وعده کیا ہے، اور ان کے باپ دادوں اور بیویوں اور اولاد میں سے (بھی) ان (سب) کو جو نیک عمل ہیں، یقیناً تو تو غالب و باحکمت ہے۔”

وَقِهِمُ السَّيِّئَاتِ وَمَن تَقِ السَّيِّئَاتِ يَوْمَئِذٍ فَقَدْ رَحِمْتَهُ وَذَٰلِكَ هُوَ الْفَوْزُ الْعَظِيمُ( سورة غافر، ۴۰:۹ )

"انہیں برائیوں سے بھی محفوظ رکھ ، اس دن تو نے جسے برائیوں سے بچا لیا اس پر تو نے رحمت کر دی، اور بہت بڑی کامیابی تو یہی ہے۔”

أصحابِ کہف کی دعاء

رَبَّنَا آتِنَا مِن لَّدُنكَ رَحْمَةً وَهَيِّئْ لَنَا مِنْ أَمْرِنَا رَشَدًا ( سورة الکھف، ۱۸:۱۰ )

"اے ہمارے پروردگار! ہمیں اپنے پاس سے رحمت عطا فرما، اور ہمارے کام میں ہمارے لیے راه یابی کو آسان کر دے۔”

أہل أعراف کی دعاء 

رَبَّنَا لَا تَجْعَلْنَا مَعَ الْقَوْمِ الظَّالِمِين ( سورة الاعراف، ۷:۴۷ )

” اے ہمارے رب! ہم کو ان ظالم لوگوں کے ساتھ شامل نہ کر۔”

رسول اللہ ﷺ اور اُنکے صحابیوں کی دعائیں 

(۱)

رَبَّنَا آتِنَا فِي الدُّنْيَا حَسَنَةً وَفِي الْآخِرَةِ حَسَنَةً وَقِنَا عَذَابَ النَّارِ( سورة البقرۃ، ۲:۲۰۱ )

"اے ہمارے رب! ہمیں دنیا میں نیکی دے اور آخرت میں بھی بھلائی عطا فرما، اور ہمیں عذاب جہنم سے نجات دے ۔”

(۲)

سَمِعْنَا وَأَطَعْنَا غُفْرَانَكَ رَبَّنَاوَإِلَيْكَ الْمَصِيرُ ( سورة البقرۃ، ۲:۲۸۵ )

"ہم نے سنا اور اطاعت کی، ہم تیری بخشش طلب کرتے ہیں اے ہمارے رب اور ہمیں تیری ہی طرف لوٹنا ہے۔”

(۳)

رَبَّنَا آمَنَّا فَاكْتُبْنَا مَعَ الشَّاهِدِينَ ( سورة المائدة، ۵:۸۳ )

"اے ہمارے رب! ہم ایمان لے آئے پس تو ہم کو بھی ان لوگوں کے ساتھ لکھ لے جو تصدیق کرتے ہیں۔”

(۴)

رَبَّنَا لَا تُؤَاخِذْنَا إِن نَّسِينَا أَوْ أَخْطَأْنَا رَبَّنَا وَلَا تَحْمِلْ عَلَيْنَا إِصْرًا كَمَا حَمَلْتَهُ عَلَى الَّذِينَ مِن قَبْلِنَارَبَّنَا وَلَا تُحَمِّلْنَا مَا لَا طَاقَةَ لَنَا بِهِ وَاعْفُ عَنَّا وَاغْفِرْ لَنَا وَارْحَمْنَا أَنتَ مَوْلَانَا فَانصُرْنَا عَلَى الْقَوْمِ الْكَافِرِينَ  ( سورة البقرۃ، ۲:۲۸۶ )

"اے ہمارے رب! اگر ہم بھول گئے ہوں یا خطا کی ہو تو ہمیں نہ پکڑنا، اے ہمارے رب! ہم پر وه بوجھ نہ ڈال جو ہم سے پہلے لوگوں پر ڈالاتھا، اے ہمارے رب! ہم پر وه بوجھ نہ ڈال جس کی ہمیں طاقت نہ ہو، اور ہم سے درگزر فرما! اور ہمیں بخش دے اور ہم پر رحم کر تو ہی ہمارا مالک ہے، ہمیں کافروں کی قوم پر غلبہ عطا فرما۔”

(۵)

رَبَّنَا لَا تُزِغْ قُلُوبَنَا بَعْدَ إِذْ هَدَيْتَنَا وَهَبْ لَنَا مِن لَّدُنكَ رَحْمَةً إِنَّكَ أَنتَ الْوَهَّابُ ( سورة آل عمران، ۳:۸ )

"اے ہمارے رب! ہمیں ہدایت دینے کے بعد ہمارے دل ٹیڑھے نہ کر دے، اور ہمیں اپنے پاس سے رحمت عطا فرما، یقیناً تو ہی بہت بڑی عطا دینے والا ہے ۔”

رَبَّنَا إِنَّكَ جَامِعُ النَّاسِ لِيَوْمٍ لَّا رَيْبَ فِيهِ إِنَّ اللَّـهَ لَا يُخْلِفُ الْمِيعَادَ ( سورة آل عمران، ۳:۹ )

"اے ہمارے رب! تو یقیناً لوگوں کو ایک دن جمع کرنے والا ہے جس کے آنے میں کوئی شک نہیں، یقیناً اللہ تعالیٰ وعده خلافی نہیں کرتا ۔”

(۶)

رَبَّنَا إِنَّنَا آمَنَّا فَاغْفِرْ لَنَا ذُنُوبَنَا وَقِنَا عَذَابَ النَّارِ ( سورة آل عمران، ۳:۱۶ )

"اے ہمارے رب! ہم ایمان لاچکے اس لیے ہمارے گناه معاف فرما، اور ہمیں عذاب جہنم سے نجات دے۔”

(۷)

رَبَّنَا مَا خَلَقْتَ هَـٰذَا بَاطِلًا سُبْحَانَكَ فَقِنَا عَذَابَ النَّارِ ( سورة آل عمران، ۳:۱۹۱ )

"اے ہمارے پروردگار! تو نے یہ بے فائده نہیں بنایا، تو پاک ہے، پس ہمیں آگ کے عذاب سے بچا لے۔”

رَبَّنَا إِنَّكَ مَن تُدْخِلِ النَّارَ فَقَدْ أَخْزَيْتَهُ وَمَا لِلظَّالِمِينَ مِنْ أَنصَارٍ ( سورة آل عمران، ۳:۱۹۲ )

"اے ہمارے پالنے والے! تو جسے جہنم میں ڈالے یقیناً تو نے اسے رسوا کیا، اور ظالموں کا مددگار کوئی نہیں۔”

رَّبَّنَا إِنَّنَا سَمِعْنَا مُنَادِيًا يُنَادِي لِلْإِيمَانِ أَنْ آمِنُوا بِرَبِّكُمْ فَآمَنَّا رَبَّنَا فَاغْفِرْ لَنَا ذُنُوبَنَا وَكَفِّرْ عَنَّا سَيِّئَاتِنَا وَتَوَفَّنَا مَعَ الْأَبْرَارِ 

( سورة آل عمران، ۳:۱۹۳ )

"اے ہمارے رب! ہم نے سنا کہ منادی کرنے والا بآواز بلند ایمان کی طرف بلا رہا ہے، کہ لوگو! اپنے رب پر ایمان لاؤ، پس ہم ایمان لائے، یا الٰہی اب تو ہمارے گناه معاف فرما اور ہماری برائیاں ہم سے دور کر دے، اور ہماری موت نیکوں کے ساتھ کر۔”

رَبَّنَا وَآتِنَا مَا وَعَدتَّنَا عَلَىٰ رُسُلِكَ وَلَا تُخْزِنَا يَوْمَ الْقِيَامَةِ إِنَّكَ لَا تُخْلِفُ الْمِيعَادَ  ( سورة آل عمران، ۳:۱۹۴ )

"اے ہمارے پالنے والے معبود! ہمیں وه دے جس کا وعده تو نے ہم سے اپنے رسولوں کی زبانی کیا ہے ، اور ہمیں قیامت کے دن رسوا نہ کر، یقیناً تو وعده خلافی نہیں کرتا۔”

(۸)

رَبِّ اغْفِرْ وَارْحَمْ وَأَنتَ خَيْرُ الرَّاحِمِينَ –(سورة المؤمنون، ۲۳:۱۱۸ )

"اے میرے رب! تو بخش اور رحم کر اور تو سب مہربانوں سے بہتر مہربانی کرنے والاہے۔”

(۹)

رَبِّ ارْحَمْهُمَا كَمَا رَبَّيَانِي صَغِيرًا  ( سورة الاسراء، ۱۷:۲۴ )

” اے میرے پروردگار! ان دونوں پر ویسا ہی رحم کر جیسا انہوں نے میرے بچپن میں میری پرورش کی ہے۔”

(۱۰)

رَبِّ إِمَّا تُرِيَنِّي مَا يُوعَدُونَ  ( سورة المؤمنون، ۲۳:۹۳ )

"اے میرے پروردگار! اگر تو مجھے وه دکھائے جس کا وعده انہیں دیا جا رہا ہے۔”

رَبِّ فَلَا تَجْعَلْنِي فِي الْقَوْمِ الظَّالِمِينَ  ( سورة المؤمنون، ۲۳:۹۴ )

” اے رب! تو مجھے ان ظالموں کے گروه میں نہ کرنا۔”

(۱۱)

رَبَّنَا آمَنَّا فَاغْفِرْ لَنَا وَارْحَمْنَا وَأَنتَ خَيْرُ الرَّاحِمِينَ( سورة المؤمنون، ۲۳:۱۰۹ )

"اے ہمارے پروردگار! ہم ایمان لاچکے ہیں تو ہمیں بخش اور ہم پر رحم فرما، تو سب مہربانوں سے زیاده مہربان ہے۔”

(۱۲)

رَبَّنَا اصْرِفْ عَنَّا عَذَابَ جَهَنَّمَ إِنَّ عَذَابَهَا كَانَ غَرَامًا ( سورة الفرقان، ۲۵:۶۵ )

"اے ہمارے پروردگار! ہم سے دوزخ کا عذاب پرے ہی پرے رکھ، کیونکہ اس کا عذاب چمٹ جانے والاہے۔”

إِنَّهَا سَاءَتْ مُسْتَقَرًّا وَمُقَامًا ( سورة الفرقان، ۲۵:۶۶ )

"بے شک وه ٹھہرنے اور رہنے کے لحاظ سے بدترین جگہ ہے۔”

(۱۳)

رَبِّ زِدْنِي عِلْمًا( سورة الانبياء، ۲۰:۱۱۴ )

"پروردگار! میرا علم بڑھا ۔”

(۱۴)

رَبَّنَا هَبْ لَنَا مِنْ أَزْوَاجِنَا وَذُرِّيَّاتِنَا قُرَّةَ أَعْيُنٍ وَاجْعَلْنَا لِلْمُتَّقِينَ إِمَامًا ( سورة الفرقان، ۲۵:۷۴ )

"اے ہمارے پروردگار! تو ہمیں ہماری بیویوں اور اولاد سے آنکھوں کی ٹھنڈک عطا فرما، اور ہمیں پرہیزگاروں کا پیشوا بنا۔”

(۱۵)

قُلِ اللَّـهُمَّ فَاطِرَ السَّمَاوَاتِ وَالْأَرْضِ عَالِمَ الْغَيْبِ وَالشَّهَادَةِ أَنتَ تَحْكُمُ بَيْنَ عِبَادِكَ فِي مَا كَانُوا فِيهِ يَخْتَلِفُونَ  ( سورة الزمر، ۳۹:۴۶ )

"آپ کہہ دیجئے! کہ اے اللہ! آسمانوں اور زمین کے پیدا کرنے والے، چھپے کھلے کے جاننے والے، تو ہی اپنے بندوں میں ان امور کا فیصلہ فرمائے گا جن میں وه الجھ رہے تھے۔”

(۱۶)

رَبِّ أَوْزِعْنِي أَنْ أَشْكُرَ نِعْمَتَكَ الَّتِي أَنْعَمْتَ عَلَيَّ وَعَلَىٰ وَالِدَيَّ وَأَنْ أَعْمَلَ صَالِحًا تَرْضَاهُ وَأَصْلِحْ لِي فِي ذُرِّيَّتِي إِنِّي تُبْتُ إِلَيْكَ وَإِنِّي مِنَ الْمُسْلِمِينَ ( سورة الاحقاف، ۴۶:۱۵ )

"اے میرے پروردگار! مجھے توفیق دے کہ میں تیری اس نعمت کا شکر بجا لاؤں، جو تو نے مجھ پر اور میرے ماں باپ پر انعام کی ہے، اور یہ کہ میں ایسے نیک عمل کروں جن سے تو خوش ہو جائے، اور تو میری اولاد بھی صالح بنا، میں تیری طرف رجوع کرتا ہوں اور میں مسلمانوں میں سے ہوں۔”

(۱۷)

رَبَّنَا أَتْمِمْ لَنَا نُورَنَا وَاغْفِرْ لَنَا إِنَّكَ عَلَىٰ كُلِّ شَيْءٍ قَدِيرٌ( سورة التحریم، ۶۶:۸ )

” اے ہمارے رب ہمیں کامل نور عطا فرما اور ہمیں بخش دے، یقیناً تو ہر چیز پر قادر ہے۔”

(۱۸)

رَبَّنَا اغْفِرْ لَنَا وَلِإِخْوَانِنَا الَّذِينَ سَبَقُونَا بِالْإِيمَانِ وَلَا تَجْعَلْ فِي قُلُوبِنَا غِلًّا لِّلَّذِينَ آمَنُوارَبَّنَا إِنَّكَ رَءُوفٌ رَّحِيمٌ ( سورة الحشر، ۵۹:۱۰ )

” اے ہمارے پروردگار! ہمیں بخش دے اور ہمارے ان بھائیوں کو بھی جو ہم سے پہلے ایمان لاچکے ہیں، اور ایمان داروں کی طرف سے ہمارے دل میں کینہ (اور دشمنی) نہ ڈال، اے ہمارے رب بیشک تو شفقت و مہربانی کرنے والاہے ۔”

٭–٭–٭–٭–٭

Advertisements

Please Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s